Tuesday September 06, 2016

 

 CONTENTS

 Home

 News

 Editorial

 Opinion

 Fauji's Diaries

 Story

 Letters

 Community/Culture

 PW Policy

Ashraf's Articles-1

Ashraf's Articles-2

Ashraf's Urdu Poem

About Us

 
 
 
 

The Life of Jinnah

 

 

 

چاند تاروں کا بدل کوئی نہیں

کے اشرف

 

رات کی تاریکی میں

کھڑکی کھلی رکھتا ہوں

 

تا کہ

تہہ در تہہ تاریکی

کے اس پار

چمکتے ہوے

 چاند ستارے دیکھوں

 

ان ستاروں سے

امڈتی روشنیاں

مجھ کو اپنی وسعت کا پتہ

دیتی ہیں

 

کیا یہ کم ہے

کہ میں

ایک ایسی کائنات

 کا حصہ ہوں

 

جہاں فصل گل

یا زرد پتوں کا موسم

اک کرشمے کے سوا

کچھ بھی نہیں

 

دور خلاوں میں

یہ چمکتے جگنو

یہ چاند ستارے

میرے ساتھی

میرے ہم سفر ہیں

 

تاریک راتوں میں

کھلی کھڑکی

کا بدل کوئی نہیں

 

دیکھنا یہ کھڑکی

ہمیشہ کھلی رکھنا

اس کا بدل کوئی نہیں

میرا بدل کوئی نہیں

 

ان چاند تاروں

کا بدل کوئی نہیں

 

20 ستمبر 2009

 

  

Pakistan Weekly - All Rights Reserved

Site Developed and Hosted By Copyworld Inc.